Canadian Tourist Assma Gulata Harassed 2

اوباش نوجوانوں نے کینیڈا سے آئی خاتون سیاح کو ہراسانی کا نشانہ بنادیا

کینڈین خاتون نے سیہالہ کے پولیس سٹیشن جا کر رپورٹ جمع کروائی ہے کہ چند اوباش نوجوانوں نے مبینہ طور پر اس کو ہراس کا نشانہ بنایا ہے، خاتون کے مطابق یہ واقعہ بحریہ ٹاون فیز 7 میں پیش آیا جہاں دونوجوان میرے ڈرائیور سے میری رہائش کے بارے میں پوچھتے رہے، اور مجھےاپنی گاڑی میں بٹھانے کی بھی کوشش کرتے، اور دوگھنٹے تک میری گاڑی کا اور میرا پیچھا کرتے رہے اور مجھےذہنی اذیت کا نشانہ بنایا جاتا رہا۔

خاتون نے نامعلوم افراد کے خلاف واقعے کی شکایت بھی درج کرادی ہے تاہم ابھی تک کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔کینڈین خاتون کا نام آصمہ گلوٹا ہے، جو 2018 میں ایک پاکستانی شخص سے شادی کر چکی ہیں اور آجکل اپنے کام کے سلسلہ میں پاکستان آئی ہوئی ہیں-آصمہ گلوٹا کا کہنا ہے کہ جب نوجوانوں نے مجھ سے بدتمیزی کی تو میں نے فوری طور پرایکشن لیتے ہوئے 15 پرپولیس کو کال کی، لیکن مجھے پولیس کی جانب سے کہا گیا کہ آپ تھانے میں فون کریں اور درخواست دیں-

آصمہ گلوٹا کامزید کہنا ہے کہ پولیس نےانکی کوئی مدد نہیں کی، اور پولیس کی جانب سے حوصلہ افزا جواب نہ ملنے پر وزیراعظم عمران خان کے شکایات پورٹل پر شکایت درج کرادی ہے، سٹیزن پورٹل پردرج شکایت ایک روز بعد آئی جی اسلام آباد کو بھجوادی گئی، شکایات پورٹل پر درج ہونے کے باوجود تاحال کسی پولیس افسرنے مجھ سے ابھی تک رابطہ نہیں کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں