Firing in London Mosque during prayer 4

نماز تراویح کے دوران لندن میں مسلح شخص کی مسجد میں فائرنگ

نیوزی لینڈ میں دہشت گردی کے واقعے کے بعد دینا بھر میں اسلاموفوبیا کی لہر جاری ہے، جس میں گزشتہ رات لندن کی ایک مسجد میں تراویح کے دوران مسلح شخص نے فائرنگ کرنے کی کوشش کی، جسے نمازیوں نے ناکام بنا دیا، جس پر وہ شخص فرار ہوگیا، تاہم واقعے میں کسی کے زخمی یا مرنے کی کوئی اطلاع نہیں ملی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مشرقی لندن کے علاقے سیون کنگز میں مسلح شخص نے اس وقت مسجد میں گھس کر فائرنگ کرنے کی کوشش کی جب نماز تراویح کا اہتمام کیا جا رہا تھا لیکن اس شخص کے ہاتھ میں اسلحہ دیکھ کر باہر موجود نمازیوں نے حملہ آور کو روکنے کی کوشش کی جس پر وہ شخص ایک فائر کر کے بھاگنے لگا، جس کے بعد نمازیوں کے پیچھا کرنے پر حملہ آور فرار ہوگیا، واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لیکر حملہ آور کی تلاش شروع کردی، لیکن حملہ آور کا نام و نشان نہ ملا، جب کہ دوسری جانب پولیس کی بھاری نفری بھی مسجد کے باہر تعینات کردیا گیا ہے۔

اسکاٹ لینڈ یارڈ کے مطابق واقعے کی جگہ سے تمام شواہد اکھٹے کر لئے گئے ہیں اور عینی شاہدین کے بیانات بھی قلمبند کیے جاچکے ہیں، حملہ آور کی پیچان اس لئے بھی مشکل ہے کیونکہ اس نے اپنا چہرہ چھپایا ہو تھا، تاہم انٹیلیجیس کی مدد سے حملہ آورشخص کی تلاش کرنے کی کوشش جاری ہے۔ پولیس کا مزید کہنا ہے کہ فائرنگ کے واقعے میں کوئی بھی شخص زخمی یا ہلاک نہیں ہوا، پولیس کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس واقعے میں دہشت گردی کا کوئی بھی عنصرشامل نہیں ہے تاہم واقعے کی مزید تحقیقات کی جارہی ہیں، اور جلد ہی حملہ آور کو گرفتار کر لیا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں